4/09/2005

دل

انسانی بہ ظاہر گوشت کا ایک ٹکرا ہے مگر اس کے اندر کی دنیا بڑی وسیع ہے ، اس پر یوں کسی نے تبصرہ کیا ہے ؛ "سینے میں دل ہے، دل میں درد ہے،درد میں نشہ ہے،نشے میں مٹھاس ہے،مٹھاس میں مزہ ہے، مزے میں آرزو ہے ،آرزو میں حسرت ہے ، حسرت میں یقین ہے ، یقین میں خیال ہے ، خیال میں تصور ہے ، تصور میں تو ہے ، تجھ میں ادا ہے ،ادا میں حیا ہے ، حیا میں نزاکت ہے ،نزاکت میں شوخی ہے ،شوخی میں غصہ ہے ، غصے میں بناوٹ ہے ، بناوٹ میں اپنائیت ہے ، اپنائیت میں چاہت ہے، چاہت میں خلوص ہے ، خلوص میں پیار ہے ، پیار میں عبادت ہے اور عبادت میں خدا ہے"۔ دل کی دھڑکن کے با رے میں انگریزی کا یہ معقولہ ؛
"Control your heart beat ,because it make Passion ,passion make Act, act make Personality,personality made Society, society made Nation"

2 تبصرے:

بد تہذیب تبصرے حذف کر دیئے جائیں گے

نیز اپنی شناخت چھپانے والے افراد کے تبصرے مٹا دیئے جائیں گے۔