6/01/2011

الم پلم

جی جناب مہنگائی کے اعلان کا مہینہ آن پہنچا! میں بجٹ کو مہنگائی ہی سمجھتا ہوں!! لہذا جون مہنگائی کا مہینہ ہوا!
آج کل لکھنے کو دل ہی نہیں کر رہا، کیوں؟؟؟ یہ بھی معلوم نہیں! ایک مسئلہ تو میرے ساتھ شروع سے ہے میں اپنے اندر کی تحریک سے کچھ لکھو تو لکھو ورنہ نہین لکھا جاتا یہ بھی کئی بار ہو چکا ایک عنوان/مضمون پر کچھ لکھا بس اختتامی جملے باقی ہیں مگر پھر بلاگ پر پوسٹ نہ کیا! ہر بار ایسا کرنے کی وجہ مختلف ہوتی تھی!
کئی دوستوں اور احباب نے بذریعہ ای میل و ایس ایم ایس بھی تجویر دی کہ اس ٹاپک پر اپنے بلاگ پر کچھ پوسٹ کرو مگر دل ہے کہ مانتا ہی نہیں!! وجہ یہ کہ جب تک مجھے اندر سے تحریک نہ ہو نہیں لکھتا!!
کیا اس کا کوئی حل ہے؟؟؟



2 تبصرے:

  1. اس کا واحد حل یہی ہے جناب۔۔۔ کہ جب تحریک ہو۔۔۔ تب ہی لکھیں اور فورا بلاگ پر پوسٹ کر دیا کریں۔۔۔ جب دل سے لکھیں گے تو لازم اچھا لکھیں گے۔۔۔ جب مجبوری سے لکھیں گے تو بات نہیں بنے گی۔۔۔

    دیکھا کیسا آسان حل دیا میں نے آپ کو۔۔۔ :)

    جواب دیںحذف کریں
  2. اس کا واحد حل ہے۔
    کہ آپ کتاب لکھنا شروع کردیں۔

    جواب دیںحذف کریں

بد تہذیب تبصرے حذف کر دیئے جائیں گے

نیز اپنی شناخت چھپانے والے افراد کے تبصرے مٹا دیئے جائیں گے۔