6/29/2006

آنکھیں خواب دیکھتیں ہیں

آنکھیں خواب دیکھتیں ہیں
کسی سے مل جانے کا
یا خود کو کھو دینے کا
تنہا رہ جانے کا
خود کو آر دینے کا
چاہت ہار دینے کا
آنکھیں خواب دیکھتیں ہیں
بچھڑے ہوئے لمحوں کا
کسی راستے پر مل جانے کا
زخموں کے سِل جانے کا
زمانے کے گزر جانے کا
خواب کے حاصل کی حقیقت کا
حقیقت کا خواب میں تحلیل ہونے کا
بکھرے خوابوں کی تکمیل کا
تم تو خود ایک خواب ہو
حسن کا، جوانی کا
ایک درد بھری کہانی کا

Tags: , , ,

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں

بد تہذیب تبصرے حذف کر دیئے جائیں گے

نیز اپنی شناخت چھپانے والے افراد کے تبصرے مٹا دیئے جائیں گے۔