ّ بے طقی باتیں بے طقے کام: 06/23/06

DITA HOCKEY دتہ ہاکی

اللہ دتہ ، پاکستان کے شہر سیالکوٹ سے تعلق، ہاکی بنانے کے فن کا ماہر جانا اور مانا جاتا۔ ابتداء اس نے اپنے محلے سے کی دوکان سے کی۔ اس کی ہاکی کافی پائیدار، نفیس اور اعٰلی ہوتی۔ اللہ دتہ کی ہاکی کی مانگ کافی ذیادہ ہو گئی۔ دتہ کی ہاکی نہ صرف پنجاب کی یا پاکستان کی علاقائی ہاکی ٹیم کے کھلاڑی استعمال کرتے بلکہ اب تو بین الاقوامی کھلاڑی بھی اس کی بنائی ہوئی ہاکی پر بھروسہ کرتے۔ دتہ کا کام کافی بڑھ گیا۔ اب اس نے ہاکی بنانے کا پورا کارخانہ بنا لیا۔ اس نے اپنے پروڈکٹ کا نام “دتہ ہاکی“ رکھا ۔ یہ لفظ "DITA HOCKEY" جب یورپین پڑھتے تو وہ اسے “ڈی ٹا ہاکی“ کہتے۔
دتہ ایک اَن پڑھ شخص تھا لہذا کہیں نا کہیں مار کھانا تھی۔ جب “دتہ ہاکی“ کی شہرت حد سے بڑھی تو جرمنی کی ایک کمپنی نے اس نام کو اپنے “ٹریڈ مارک“ کے طور پر رجسٹر کروا لیا۔ اب “دتہ ہاکی“ کا ٹریڈ مارک اس کی ملکیت ہو گئی جو اس کا خالق نہ تھا۔ دتی کی اولاد تعلیم یافتہ ہے لہذا انہوں نے اس ٹریڈ مارکہ کے لئے قانونی جنگ لڑنے کا فیصلہ کیا۔ جس میں انہیں ناکامی ہوئی۔ اب بھی دتہ ہاکی بنانے کے کام سے وابستہ ہے اس کی ہاکی اب بھی باہر جاتی ہے اسے اب بھی “دتہ ہاکی“ کے نام سے جانا جاتا ہے مگر یہ مارکہ اس کی ملکیت نہیں ہے۔
یہ قصہ یا کہانی (جو سچی ہے) میرے سینئر نے ٹریڈ مارک کی اہمیت بتانے کے لئے بتایا ہے۔